• Home »
  • Uncategorized »
  • مہنگائی کیخلاف جنگ شروع، کل کابینہ کے اجلاس میں بڑے فیصلے متوقع کچھ بھی ہو جائے غذائی اجناس کی قیمتوں میں کمی کیلئے اقدامات کرینگے: عمران خان

مہنگائی کیخلاف جنگ شروع، کل کابینہ کے اجلاس میں بڑے فیصلے متوقع کچھ بھی ہو جائے غذائی اجناس کی قیمتوں میں کمی کیلئے اقدامات کرینگے: عمران خان

اسلام آباد (، مانیٹرنگ ڈیسک،)حکومت نے مہنگائی پر قابو پانے کے مشن کا آغاز کر دیا وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کہا کہ وہ منگل کو کابینہ اجلاس میں بنیادی غذائی اجناس کی قیمتوں میں کمی کی خاطر مختلف اقدامات کا اعلان کریں گے۔ اپنے سوشل میڈیا بیان میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مجھے ان مشکلات کا ادراک ہے جن کا تنخواہ دار طبقے سمیت مجموعی طور پر عوام کو سامنا ہے۔انہوں نے کہا کہ ’میں نے فیصلہ کیا ہے کہ کچھ بھی ہو جائے، میری حکومت منگل کو کابینہ کے اجلاس میں عوام کے لیے بنیادی غذائی اجناس کی قیمتوں میں کمی کی خاطر مختلف اقدامات کا اعلان کرے گی‘۔ تمام متعلقہ حکومتی ادارے آٹے اور چینی کی قیمتوں میں اضافے کے اسباب کی جامع تحقیقات کا آغاز کر چکے ہیں۔ قوم اطمینان رکھے، مہنگائی کے ذمہ داروں کا بھرپور محاسبہ کیا جائے گا اور انہیں قرار واقعی سزا دی جائے گی۔گزشتہ روز بھی ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی سے متعلق اسلام آباد میں ہونے والے اجلاس میں وزیراعظم نے آٹا، گھی، چینی، چاول اور دالوں کی قیمتیں کم کرنے کے لیے اقدامات کی ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ عوام کو ریلیف دینے کیلئے جو بھی کرنا پڑا کریں گے۔کابینہ کے اجلاس میں پاکستان کے راستے نیٹو سپلائی کے حوالے سے ایم او یو میں توسیع سمیت دیگر امور زیرغور آئیں گے۔وفاقی کابینہ کے اجلاس میں چھٹی مردم شماری کے نتائج جاری کرنے کی منظوری دی جائے گی۔ اجلاس میں حج پالیسی اور پلان 2020 منظوری کیلئے پیش کیا جائے گا۔کابینہ اجلاس میں زائرین مینجمنٹ پالیسی اور ریگولیٹری فریم ورک کا معاملہ زیر غور آئے گا۔ اس کے علاوہ پاکستان اور امریکا کے درمیان کارگو ٹرانزٹ کی مفاہمتی یادداشت میں توسیع کا معاملہ بھی ایجنڈے میں شامل ہے۔ ایم او یو کے تحت امریکی کارگو پاکستان کے راستے افغانستان جا سکتا ہے۔وفاقی کابینہ کے اجلاس میں پاکستان میں افغان مہاجرین کے 40 سال ہونے پر عالمی کانفرنس کے انعقاد پر بریفنگ دی جائے گی۔ یہ عالمی کانفرنس 17 اور 18 فروری کو اسلام آباد میں منعقد ہوگی۔وفاقی کابینہ کے اجلاس میں بھارت سے مورتیوں کی درآمد کی اجازت کے حوالے سے غور کیا جائے گا۔ ایکسپورٹ اور امپورٹ پالیسی آرڈر 2016 میں ترمیم کی سمری پیش کی جائے گی جبکہ وفاقی کابینہ کو سرمایہ کاری پر بھی بریفنگ دی جائے گی۔کابینہ اجلاس کے ایجنڈے میں ہیومن آرگن ٹرانسپلانٹ اتھارٹی کے ایڈمنسٹریٹر کی تعیناتی کا معاملہ بھی شامل ہے۔ کابینہ ای سی سی کے 20 جنوری اور 4 فروری کے اجلاسوں اور 4 فروری کے کابینہ نجکاری کمیٹی کے فیصلوں کی بھی توثیق کرے گی۔دوسری طرف وزیر اعظم عمران خان نے عذیر بلوچ، نثار مورائی اور سانحہ بلدیہ کی رپورٹس منظر عام پر لانے کے عدالتی فیصلے کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ صوبائی حکومت عدالتی فیصلے پر فوری عمل درآمد کرے، حقائق کا عوام کے سامنے آنا ضروری ہے وزیر اعظم عمران خان سے وفاقی وزیر علی زیدی کی ملاقات ہوئی جس میں عذیر بلوچ، نثار مورائی اور سانحہ بلدیہ کی رپورٹس جاری کرنے کے عدالتی حکم کے بارے میں گفتگو ہوئی۔ اس موقع پر علی زیدی نے چیف سیکریٹری سندھ کو لکھے گئے خط کے بارے میں وزیر اعظم کو آگاہ کیا۔ علی زیدی کا کہنا تھا کہ چیف سیکریٹری سے عدالتی حکم کے مطابق کاپی فراہم کرنے کی درخواست کی۔ درخواست پر عمل نہ ہوا تو توہین عدالت کی کارروائی شروع کریں گے۔وزیر اعظم عمران خان نے جے آئی ٹی رپورٹس منظر عام پر لانے کے عدالتی فیصلے کی حمایت کی۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت عدالتی فیصلے پر فوری عمل درآمد کرے، حقائق کا عوام کے سامنے آنا ضروری ہے۔

ع